Oral Sex - best cunnilingus positions

Cunnilingus is an oral sex act performed by a person on a female’s genitalia (the clitoris, other parts of the vulva or the vagina). The clitoris is the most sexually sensitive part of the human female genitalia, and its stimulation may result in female sexual arousal or orgasm.

Cunnilingus can be sexually arousing for participants, and may be performed by a sexual partner as foreplay to incite sexual arousal before other sexual activities (such as vaginal or anal intercourse), or as an erotic and physically intimate act on its own.

Like most forms of sexual activity, oral sex can be a risk for contracting sexually transmitted infections (STIs/STDs). However, the transmission risk for oral sex, especially HIV transmission, is significantly lower than for vaginal or anal sex. Vagina should be properly cleaned before it is offered for licking to a partner.

Women can variate the fun with the use of fingers; rubbing anus or clit. Similarly, during the activity, the receiving woman’s partner may use fingers to open the labia majora (genital lips) to enable the tongue to better stimulate the clitoris, or the female may separate the labia for her partner. Separating the legs wide would also usually open the vulva sufficiently for the partner to orally reach the clitoris.

Different positions for cunnilingus add fun to the foreplays and oral sex.

Oral sex can get boring for women if she’s always laying down to receive. While oral sex is great in just about every shape or form, you can really heat things up with different oral sex positions. In fact, when your partner is going down on you in a variety of different ways, the same moves and techniques can actually feel totally different.

There are hundreds of variations to major oral sex poses, but care should be taken that excessive variation in positions do not develop cramps on the sore neck of the cunnilingus giver.

Cunnilingus Oral Sex Positions

Try these new and easy oral sex positions to make him going down on you a lot more fun!

Start with Vagina Foreplay

how to lick vagina steps

Set Vagina on Fire!

After foreplay, it is important to make her wet with her natural juices. You must circle, whirl, move tongue up/down sideways in/out and keep repeating the licking process till she gets completely wet.

Kiss, suck her vagina in between while licking.

how to lick vagina 10 steps

Best Position to Make Her Excited

how to vagina foreplay cunnilingus orgasm

Standing Up

Guys will often get a blowjob standing up – but because a woman’s genitals don’t “stick out” like a man’s does, a woman doesn’t often get to stand while receiving oral sex. Next time your man goes down on you, suggest that he goes “up” on you instead! Stand over his head and let him come up underneath you to pleasure you with his mouth.

Variation: Prop your leg up on a table or a chair to allow him full and total access to your genitals. He’ll love being able to really see what he’s doing down there!

Down And Dirty Doggy Style

If your guy doesn’t mind being close to your back door entrance – or if he enjoys giving you analingus at the same time he’s going down on you – doggy style is definitely right up your alley. Kneel on all fours just as you would if you and your partner were going to have sex and he’s going to enter you from behind. Instead of penetrating you with his penis, he’ll actually bring his face down there and lick and suck you from behind. Seriously though, if your guy is back door shy, stay away from this one.

Variation: Have him flip over on his back and slide up underneath you, facing your genitals. He can give you oral sex this way, without being so involved with your behind.

licking vulva pussy poses and cunnilingus positions

Sitting With Legs Spread Wide

Sit up on a couch or chair and spread your legs as wide as you can, making your entire genital area open to your partner. Have him kneel down or sit on the floor, about eye level with your vulva. He can reach you easily this way, both with his mouth and his hands – which comes in “handy” for fingering. This is actually a very comfortable position for both you and your partner, provided that you’re both at the right level. If either of you is stretching up or hunched down to get in this position, try to find another chair or place to sit where you can be more comfortable.

Variation: Try spreading your vaginal lips with your fingers while your partner goes down on you. Not only will he love having full access to your lady parts, he’ll also love how unabashed and naughty this move is.

On The Side

This too is one of the most comfortable oral sex positions both for the giver and the receiver. Lie on your side on the bed or couch and have your partner lie upside down behind you. He should be facing your rear. Lift up the leg that is not on the bed and hold it high either with your hands or with some kind of restraint (which could be even more fun with a little bondage!) He’s going to slide his head in between your legs, bringing his face around to meet your genitals. He can rest his head and neck on your thigh while he eats you out.

Variation: Once he’s going down on you, release your leg and rest it on his shoulders. This gives him less access to your vulva, but it does give your leg a rest!

licking vagina - Cunnilingus positions

A New Twist On Oral Sex “Missionary”

The “missionary” version of oral sex positions is where the woman is lying down and the man lies on his stomach with his face buried deep in between her legs. While this is an excellent way to reach orgasm during oral sex – after all, there’s a reason it’s considered a “classic” – there are different things you can do with it to make it even more fun. After you lie down, bring your legs together and then raise them up, bringing your knees close to your stomach. Your legs should still be together. This allows your man to come up underneath your legs and lick your vulva. Have him bury his tongue deep in your folds, because light licking isn’t going to do the trick here with your legs pressed together.

Variation: Rest your legs on his shoulders when you get tired of holding them up. This will make it easier for him to go down on you, and it will be more comfortable for you when you get closer and closer to orgasm.

Sitting…On His Face

You’ve probably heard of this one, but it’s not played out just yet. Sitting on a man’s face is incredibly erotic for a woman, especially if she’s into domination and he’s into submission. After giving your man a blowjob with him lying down, crawl up his body and plant your genitals right on his face. He’ll love the idea of you grinding against his face while he’s eating you out.

Variation: Do a “reverse cowgirl” sort of move and face his feet instead. This is a great way to do it if you both love anal play, or at least don’t mind it.

licking vagina poses and cunnilingus positions

On The Edge Of The Bed

You can use the edge of the bed during cunnilingus easily. The bed is a great tool to use if you want to get into different oral sex positions, because it’s height, size and shape is perfect. However, remember that you don’t always both need to be on the bed to utilize it. Have your partner lie down on the bed with his head as close to the edge as possible. In fact, he may need to scoot up enough so that most of his head is actually off the bed. You’re going to come in and straddle his face while standing!

Variation: Prop one of your legs up on the bed and lower yourself down onto his face. This may be a little difficult for you to do, but the end result is worth it! He’ll love the full view of your vulva above him!

The New “Woman On Top”

While sixty-nine is a great way to both give and receive oral sex at the same time, if a woman just wants to receive (or a guy just wants to give), this is probably not the way to go. Instead, the woman will lie on top of the man facing the ceiling, scooting her genitals up to his face. Her head will probably rest on or close to his penis, but this one is all about her!

Variation: Lift up your legs to expose your anus to your partner for anal play!

Licking Vagina New Year Poses!

cunnilingus oral sex positions lesbian

How to Lick Vagina: Pleasure Deriving Secrets

This is how you move your tongue all around her vagina

Click on the cunnilingus licking vagina image below for an enlarged view

This is how you roll your tongue all over vagina and clitoris.

You find many people talk about oral sex – but how many of them have mastery of it?

We have listed oral sex guides here for you to become master of fellatio/cunnilingus. Explore several health aspects of oral sex here.

Enjoy lick and suck in those naughty moments of your life.

Become an Oral Sex Expert – Oral Sex Guides for All

Oral Sex: How Safe Is Licking Vagina, Penis or Anus ?
Licking Vagina Poses: Cunnilingus Oral Sex Positions
Expert’s Advice on Licking Vagina (with Poses)
What Is Cunnilingus. How to Lick Vagina?
Cunnilingus – Oral sex On a Vulva
Oral Sex – Does Oral Sex Have Health Benefits – Good Oral Sex Counts
How to Become Cunnilingus Oral Sex Expert
Fellatio: Oral sex upon a Male Sex Organ
Safe Oral Sex in Kamasutra
Risky Fellatio and Cunnilingus: Harmful Effects of Oral Sex
Oral Sex Tips For Woman – Mind Blowing Oral Sex Tips – Seduce Him, Make Him Yours
Oral Sex: Cunnilingus Tips, Sweeten Fellatio and Bacterial Vaginosis
Tips on Oral Sex – Art of Giving Good Head – Seduce Your Partner With Stunning Oral Treats
Giving Oral Sex To Woman – Become Popular Among Women
Can I Get Oral Disease Due to Oral Sex?

430 Sex Positions [$4.99 only]

  • If you want to get closer to your partner, spice up your love and sex life, then you need to add variations to your interactions and sexual intercourse positions. You need to know about positions that help in achieving intense, quick or delayed orgasms. 430 Kamasutra Sex Positions shows colorful 400+ pages detailed ebook about unique sex poses for mind-blowing ecstasy to you and your lover. Add new flavor daily for 430 days, only at $4.99 not $12.99 for today.

Comments

  1. SexologistMartha says:

    The fluid that is present in her vagina when you are performing oral sex is naturally produced by a gland in her vagina to help lubricate it — making it easier for penetration. It is also a sign that she is aroused. Usually a little alkaline in taste, this fluid normally does have an odour but not a foul one. Largely it is safe to ingest and does not have any ill effects on your health. You could also give your girlfriend some tips on how to clean herself before oral sex. The Vaginal The woman’s Vagina contains a type of “good bacteria” known as the probiotics. This probiotics are also gotten from supplements or yoghurts. The vaginal contains lactobacillus, a bacteria that grows to regulate vaginal pH. The vagina has a healthy PH level of 4.5, the Lactobacilli produce lactic acid, to help keep this PH level. I must tell you the next time you are considering going down on your woman, bear in mind that her body is designed for your full benefit. As you pleasure yourself eating her pussy you are relieved from some typical healthy defects such as: Prevention of Heart Disease and Cancer Researchers have discovered that eating a girl’s private organ could save you from fatal diseases such as cancer and heart disease. According to the research that was made in the State University of New York, the most important meal that a man should take is eating a vagina. First, you should know that the medical experts say that the hormones such as the DHEA Hormones and Oxytocin are being produced during oral sex. These hormones are capable of preventing cancer to an individual. Aids Digestion Eating Probiotics present in the vagina aids in digestion, allowing good microorganisms to balance out your gastrointestinal system, according to Medical Daily. Mood Eleviation Eating probiotics can also boost your mood and help alleviate depression, according to Medical Daily. This is getting interesting, isn’t it? The female orgasm also benefits your mental and physical health. An orgasm releases oxytocin, dopamine, and endorphins, which can even alleviate pain — if you come back feeling much pain don’t ask for a massage, Ask for a pussy.

  2. الزوجين says:

    لسلام عليكم و رحمة الله تعالى و بركاته أود أن أعرف حكم الاسلام في مص و لحس الأعضاء التناسلية بين الزوجين أثناء الجماع. في المذاهب الأربعة أود أن يكون الجواب صريحا مع ادلة من الكتاب و السنة. و ان كان من الممكن أن يكون الجواب باللغتين الفرنسية و العربية. جزاكم الله كل خير تفبل الله منا و منكم انشاء الله

  3. ڈاکٹر شہد says:

    شروع ہی سے مرد عورت کے بارے میں چند غلط فہمیوں کا شکار رہا ہے جو مندرجہ ذیل ہیں. مرد عورت کو اپنی شہوانی خواہشات کی آگ بجھانے کا ایک خوبصورت آلہ سمجھتا ہے. حالانکہ حقیقت یہ ہے کہ عورت انسان کی نسل برقرار رکھنے کے لیے پیدا کی گئی ہے اور قدرت نے اسے مرد کی رفیق اور ہر پریشانی و درد کی ساتھی پا کر بھیجا ہے. اس لیے مرد کو چاہیئے کہ وہ اس صیحح اور جائز استعمال کر کے اپنی زندگی کو بہشت کا نمونہ بنائے اور تندرست و توانا اولاد پیدا کر کے اپنی نسل کو بہتر بنائے. ا کے لیے عورت کو بھی چاہیئے کہ وہ اپنے آپ کو بلکل بے کس اور مجبور خیال نہ کرے یا اپنے آپ کو بالکل ہی مرد کی دست نگ تصور نہ کرے. بلکہ مرد کی ہم پلہ بن کر اپنے آپ کو صیحح معنوں میں نصف بہتر بنائے . لڑکی کے والدین کو چاہیئے کہ وہ شروع سے ہی اپنی لڑکی میں ایسے اوصاف پیدا کریں جن سے وہ مرد کے لیے وبال جان نہ بنے بلکہ اس کی صیحح شریک زندگی ثابت ھو. اکثر اوقات مرد یہ سمجھتے ہیں کہ عورت میں جنسی خواہشات مرد کی نسبت بہت زیادہ ھوتی ہیں اور وہ تقریبا ہر وقت مباشرت کے لیے تیار رہتی ہے حالانکہ حقیقت کا اس سے دور کا بھی کوئی واسطہ نہیں ہوتا . عورت بے چاری تو خواہش کے نہ ھوتے ھوئے بھی اپنے خاوند کو خوش کرنے کے لییے مباشرت کے لیے تیار ھو جاتی ہے. اسی وجہ سے مرد یہ سمجھتا ہے کہ اس کی بیوی پر شہوت کا غلبہ رہتا ہے اور وہ خاوند کا اشارہ پاتے ہی یہ آگ بجھانے کے لیے تیار ھو جاتی ہے. جو لوگ عوررت کو وقت بے وقت ستاتے رہتے ہیں اور کثرت سے مباشرت کرتے ہیں وہ جلد ہی کمزور ھو جاتے ہیں اور جس وقت عورت کو ان کی ضرورت پڑتی ہے تو وہ مباشرت میں ناکام ھو جاتے ہیں بار بار ایسا ھونے سے عورت غم و غصے میں مبتلا ھو کر بدکار ھو جاتی ھے. علم تولید کے مشہور ڈآکٹر نے اپنی کتاب میں لکھا ہے کہ ناکام مباشرت کی +وجہ سے بہت سی عوررتی رحم کے امراض میں مبتلا ھو جاتی ہیں. ڈآکٹر میری سٹوپس نے لکھا ہے کہ کامیاب مباشرت کے بعد عورت کا جسم ڈھیلا پڑ جاتا ہے اور وہ سکون کی نیند سوتی ھے. اگر مباشرت ناکام ھو تو وہ بے چین ہوجاتی ھے اور صحت بگڑتی چلی جاتی ھے. ایک آسٹرین ڈاکٹر کے مطابق رحم کی مرض عورتوں میں پچھتر فیصد عورتوں ے رحم میں خون جم گیا کونکہ ان کو مکمل جنسی تسکین حاصل نہ ھوئی. اکثر و بیشتر مرد یہ سمجھتے یہں کہ ان کی بیوی حاملہ ھو چکی ہے تو یہ اس بات کا ثبوت ہے کہ اس کی جنسی خواہشات کی تکمیل صیحح طور پر ھو رہی ہے. لیکن یہ بات صیحح نہیں ہے حقیقت یہ ہے کہ حمل عورت کی پیاس بجھے بغیر بھی ٹھہر سکتا ہے کیونکہ مرد کے مادہ منویہ میں لاکھوں جراثیم ھوتے ہیں اگر ایک جراثیم بھی عورت کے بیضہ سے مل جاتے تو وہ رحم کی دیوار سے چپک کر حمل کا باعث بن سکتا ہے. بعض اوقات ایسے لوگ بھی دیکھنے میں آتے ہیں کہ مرد کا مادہ منویہ اندام نہانی کے منہ پر ہی گرا اور اس کے باوجود بھی حمل ٹھہر گیا اسس سے یہ بات ثابت ھوتی ہے اگر عورت بار بار بھی حاملہ ھو جائے تو اس سے یہ بات نہیں سمجھنی چاہیئے کہ عورت کی جنسی تسکین صیحح طور پر ھو رہی ہے بہت سے نوجوان شادی سے قبل بھی مباشرت کئے بغیر نہیں رہ سکتے۔ مردوں کو مندرجہ ذیل باتوں کا خیال رکھنا چاہیئے. جن عورتوں کو بانجھھ پن ، سیلان الرحم یا جریان عغیرہ کی شکایت ھو تو ایسی عورت سے مباشرت نہیں کرنی چاہیئے کونکہ اس سے مختلف قسم کی بیماریاں پیدا ھو جاتی ہیں. پندرہ برس سے کم عمر کی لڑکی سے مباشرت نہیں کرنی چاہیئے. جو عورت خود مباشرت کی خواہش ظاہر کرے اس سے مباشرت نہیں کرنی چاہیے کونکہ جس طرح وہ تم سے اس خواہش کا اظہار کر رہی ہے وہ دوسروں پر بھی اس خواہش کا اظہار کر چکی ھو گی. اور انہیں فیض یاب بھی کر چکی ھو گی. بہت سے مختلف لوگوں کا مادہ منویہ اس کی اندام نہانی میں مختلف بیماریاں پیدا کر چکا ھو گا اور یہ بیماریا ںتم کو بھی لگ سکتی ہیں اس لیے اس طرح کی عورت سے مباشرت نہیں کرنی چاہیئے. میلی گندی رہنے والی اور لنگڑی لولی عورت سے مباشرت نہیں کرنی چاہیئے کونکہ ان سے گھن آنے کی وجہ سے لذت حاصل نہیں ھوتی. اپنی سے بڑی عورت سے مباشرت نہیں کرنی چاہیئے. اس سے تم کمزور ھو جاؤ گے. بڑوں کا قول ھے کہ اگر کوئی بوڑھا مرد نوجوان عورت سے شادی کرتا ہے تو وہ جوان ھو جائے گا اور اگر کوئی جوان بوڑھی عورت سے شادی کرے گا تو وہ بوڑھا ہے جائے گا. بوڑھی عورتوں سے کبھی مباشرت نہیں کرنی چاہیئے کیونکہ ان کی اندام نہانی بہت سا مادہ منویہ چوس لیتی ہے اور مرد کمزور ھو جاتا ہےایسی عورتیں جو اپنی کسی سہیلی وغیرہ سے اندام نہانی رگڑوا کر انزال کروانے کی عادی ھوں ان سے بھی مباشرت نہیں کرنی چاہیئے ایسی عورت سے مباشرت کرنے سے سوزاک ھو جانے کا ڈر رہتا ھے. غیر ملکی عورتوں سے مباشرت نہیں کرنی چاہیئے کیونکہ ان کا مزاج تم سے الگ ھوتا ہے عورتوں کے بارے میں غلط تصورات اور واہمے بنیادی طور پر مردوں کے بارے میں رائج تصورات سے مختلف ہوتے ہیں عام طور پر عمر اور شکل و صورت زیادہ تر ان باتوں کی بنیاد ہوتی ہے جیسے جتنی کم عمر ہو گی اتنی بہتر ہو گی۔ اسی طرح پرکشش خاتون میں ایک سیدھی سادی کی نسبت زیادہ سیکس ہو گی۔ عورتیں بھی اپنی چھاتیوں کے سائز‘ شکل اور لچک کے بارے میں فکر مند رہتی ہیں کہ آیا وہ سخت ہیں یا نرم پڑ گئی ہیں یا جیسے بچے کی پیدائش کے بعد لٹک جاتی ہیں اسی طرح سیکس اور جنسی عمل کے دوران انتہائی حد تک پہنچنے کے بارے میں تصوراتی خیالات پائے جاتے ہیں جن کا حقیقت سے دور کا بھی واسطہ نہیں ہوتا۔ ذرائع نشرو اشاعت نے یہ بات پھیلا رکھی ہے کہ جتنے سخت یا برے طریقے سے اسے جنسی عمل کے دوران رگیدا جائے گا اتنا ہی اس کے حق میں بہتر ہو گا اور بہت سی خواتین اسے اپنی جنسی زندگی کے معمولات کے طور پر قبول کر لیتی ہیں بے شک اس عمل میں انہیں تکلیف‘ زحمت اور بلکہ زخمی ہو جانا پڑے حالانکہ اندرونی طور پر بہت سی خواتین کی خواہش ہوتی ہے کہ ان سے جنسی عمل کے دوران نرمی برتی جائے۔ لیکن اس کا کیا کیا جائے کہ جنسی فعل کے دوران آخری حد تک پہنچنے کی متلاشی خاتون ایک سے زائد آخری حدودوں کی بھی خواہش مند رہتی ہے۔ عمر تمام معاشروں میں اور خاص طور پر ہمارے معاشرہ میں عمر ایک خاص رول ادا کرتی ہے زندگی کا ساتھی چننے کے لئے ایک 60 سال سے زائد عمر کا مرد بخوشی 16 سال کی لڑکی کو زندگی کا ساتھی بنانے پر رضامند ہو جاتا ہے۔ لیکن مغربی مردوں کو اب اس بات کا پتہ چل چکا ہے کہ تجربہ کار اور بڑی عمر کی عورت جنسی عمل میں زیادہ حد تک ساتھ دیتی ہے جس سے صحیح لطف حاصل کیا جا سکتا ہے بجائے نو عمر کے جو کہ بالکل ناتجربہ کار اور جنس کے معاملہ میں اناڑی ہوتی ہے۔ جسم کی بناوٹ اور شکل و صورت عورتوں کے لئے بنائو سنگار کا سامان بنانے والے‘ رنگین قوس قزح کے رنگوں والی ساڑھیاں بنانے والے‘ لاتعداد قسم کی برا (چولی۔ Bar) ڈیزائن کرنے والے‘ بیوٹی پارلر اور مساج کرنے والوں کا بس صرف ایک مقصد ہے کہ عورت کو کسی طرح نرم اندام‘ نرم و نازک‘ پتلی سی بنا کر اور جنسی طور پر پرکشش بنا کر اس طرح پیش کیا جائے کہ وہ مرد کو لبھائے یا اپنی طرف متوجہ کر سکے۔ خواہ سکول ہو یا کالج‘ نوکری کے لئے درخواست دی ہو یا شادی کے لئے خاوند کی تلاش ہو ہر جگہ شکل و صورت کو غیر ضروری اہمیت دی جاتی ہے کیا وہ گوری ہے یا کالی؟ کیا وہ پتلی ہے یا موٹی؟ یہ سب چیزیں شکل و صورت کے ساتھ مل کر اہمیت کو بڑھاتی ہیں جبکہ سیدھی سادی بنائو سنگھار کے بغیر خواتین ان چیزوں کی وجہ سے حساس ہو جاتی ہیں اور عجیب سا محسوس کرتی رہتی ہیں۔ لیکن یہ بہت سے مردوں کا تجربہ ہے کہ سیدھی سادی خواتین جنسی عمل کے دوران زیادہ ردعمل ظاہر کرتی ہیں اور ان کے تعاون کی حد ان ’’نیوٹرون بموں‘‘ سے زیادہ ہوتی ہے جو سج کر ہر انگ انگ سے سیکس کا اشتہار بنی پھرتی ہیں لیکن دور کے ڈھول سہانے۔ چھاتیاں چھاتیوں کا سائز بہت سی نوجوان خواتین کے لئے پریشانی کا باعث ہوتا ہے اور انہوں نے پلاسٹک سرجری کا نام سنا ہوتا ہے اس وجہ سے لاتعداد نوجوان خواتین اپنی چھاتیوں کا سائز بڑھانا چاہتی ہیں۔ یہ اس غلط تصور کی وجہ سے ہے کہ مرد ایسی چھاتیوں کو پسند کرتے ہیں جن سے ہاتھ بھر جائیں یا ہتھیلیوں میں سما جائیں۔ اسی طرح جن خواتین کی چھاتیاں بہت بڑی ہوتی ہیں وہ بھی فکر مند رہتی ہیں اور چاہتی ہیں کہ پلاسٹک سرجری کے ذریعے انہیں چھوٹا کرا لیا جائے‘ چھاتیوں میں تنی حالت کی کمی‘ لچک کی کمی‘ یا لٹکتی ہوئی چھاتیاں جو اکثر بچوں کو چھاتیوں سے دودھ پلانے کی حالت میں ہو جاتی ہیں یہ ایسی وجوہات ہیں جو اکثر خواتین میں پریشانی کا باعث بنتی ہیں۔ ہم ایسی تمام خواتین کو یقین دلاتے ہیں کہ جنسی عمل کے دوران چھاتیوں کا رول ان کے سائز یا لچک سے ہرگز مشروط نہیں ہے۔ کچھ خواتین جن کی چھاتیاں چھوٹی ہوتی ہیں وہ جنسی عمل میں فوری ردعمل دیتی ہیں بہ نسبت ان کے جن کی چھاتیاں تو بڑی ہوتی ہیں لیکن وہ جنسی عمل میں فوری اور بھرپور ساتھ نہیں دے سکتیں۔ جنسی عمل کی آخری حد تک پہنچنا آرگزم (Orgasm) مشرقی عورت آرگزم کے بارے میں کم ہی فکرمند رہتی ہے کیونکہ اس کی پرورش اس طرح کی گئی ہے کہ اس کا کام جنسی عمل میں صرف مرد کو خوش کرنا اور اس کو راضی رکھنے کے لئے کوشاں رہنا ہے۔ اس لئے اس کا رول کرنے والا نہیں ہے بلکہ کرنے والے کا ساتھ دینا اس طرح کہ مکمل خود سپردگی کی کیفیت میں اپنے آپ کو مرد کے رحم و کرم پر چھوڑ دینا ہے وہ اس سے جس طرح کا بھی سلوک کرے۔ لیکن اب عورتوں کی آزادی اور برابری کی تحریکیں زور پکڑنے سے عورتیں بھی اب یہ فکر رکھنے لگی ہیں کہ جنسی عمل کے دوران ان کو بھی آرگزم کی حد تک پہنچنا ضروری ہوتا ہے تاکہ صحیح طور پر لطف اندوز ہو سکیں پہلے تو یہ ہوتا تھا کہ جتنا یا جیسا آپ نے کر دیا اس سے زیادہ کا علم نہ ہونے کی وجہ سے کوئی غم بھی نہیں ہوتا تھا لیکن اب علم آ جانے کی وجہ سے وہ غیر ضروری طور پر فکرمند رہنے لگی ہے اور یہ سوچنے لگی ہے کہ ضرور مجھ میں کوئی کمی یا نقص ہے جو میں اپنے ساتھی کے ساتھ آرگزم کی حد یا منزل تک کیوں نہیں پہنچتی ۔ اندام نہانی اور اندام نہانی کی فولڈ (غلاف) میں اوپر کی طرف چھپے کلائیٹورس :(Clitaris) میں آرگزم مختلف ہوتے ہیں ماسٹرز اور جانسن کے ابتدائی کام میں یہ خیال ظاہر کیا گیا کہ عورتوں میں دو قسم کا آرگزم ہوتا ہے انہوں نے بالکل قطعی نتیجہ کے طور پر ثابت کیا کہ تمام آرگزم کلائیٹورس میں پیدا ہوتے ہیں اور پھر اندام نہانی کی طرف چلے جاتے ہیں ایسی بات قطعی طور پر غلط ہے اور کوئی کلائیٹورس اور اندام نہانی کے آرگزم علیحدہ وجود نہیں رکھتے بلکہ صرف ایک جنسی آرگزم ہوتا ہے۔ عورتیں جنسی عمل میں سختی اور درشتگی پسند کرتی ہیں یہ بات عام طور پر بتائی اور پڑھائی جاتی ہے کہ جدید عورت جنسی عمل کے دوران سختی پسند کرتی ہے اور اسے جتنا زیادہ زور سے جکڑا جائے گا یا تکلیف یا اذیت پہنچائی جائے گی وہ چیخے چلائے گی اور مزہ لے گی۔ اصل میں مردوں نے یہ فلسفہ ایجاد کیا اور عورتیں بھی اس پر یقین کرنے لگی ہیں یہ جاننا ضروری ہے کہ بہت سی خواتین چاہتی ہیں کہ جنسی عمل کے دوران ان کا ساتھی نرمی سے دخول کرے خاص طور پر دخول کرنے سے پہلے کی چھیڑ چھاڑ اور شروع کے دخول میں جب تک کہ وہ دونوں ایک دوسرے کے آشنا نہ ہو جائیں۔ مشہور ماہر جنسیات وتسے یانا نے مردوں کو مشورہ دیا ہے کہ جنسی عمل کے دوران اپنے ساتھی سے نرمی کا برتائو کریں۔لیکن اس نرمی کا ہرگز یہ مطلب نہ لیا جائے کہ مرد کا عضو تناسل بھی نرم ہو ۔۔۔۔۔ عورت کا ’’ناں‘‘ کہنے کا مطلب ’’ہاں‘‘ ہے کسی نے کہا کہ اگر ایک بیوقوف سے بیوقوف بندہ بھی یہ کر لے کہ عورت جب ناں کہے تو اسے ہاں سمجھے تو دنیا سے0 9 فیصد مسائل ختم ہو جائیں یہ پیغام کہ ’’عورت کی ناں کو سنجیدگی سے نہ لیا جائے‘‘ کو ہمارے ناولوں‘ فلموں‘ ڈراموں اور رسالوں میں اس بے دردی سے استعمال کیا گیا ہے کہ بدقسمت مرد اپنی عقل سے ہی یہ فیصلہ کرنے پر مجبور ہے کہ اگر وہ ناں کہہ رہی ہے تو کیا وہ جنسی عمل پر آمادہ ہے کہ نہیں؟ اور کیا میں اس کی ناں کے باوجود مزید پیش قدمی کروں؟ کیا عورتیں چاہتی ہیں کہ ان کے احتجاج کے باوجود انہیں زبردستی دبوچ لیا جائے؟ اور یہ ہمارے معاشرے کا طور طریقہ ہے کہ عورت نہ نہ کرتی رہ جاتی ہے اور مرد سب کچھ کر کے فارغ ہو جاتا ہے اور یہ بھی ہمارے معاشرہ کی ریت ہے کہ عورت کو شرم اور انکار کا اظہار کرنا پڑتا ہے بے شک وہ چاہ بھی رہی ہو لیکن اس کی تربیت یہ کی گئی ہوتی ہے کہ مرد کی پہل سے بچنے کی کوشش جاری رکھے جب تک کہ مرد بزور اس پر حاوی نہ ہو جائے۔ کیاعورت ہمہ وقت جنس کی متلاشی ہوتی ہے؟ ’’میں اپنی بیوی کے ساتھ کس طرح گذارا کروں‘‘اختر نے مجھ پر آشکارا کیا ’’وہ تو ہر وقت سیکس کی طلب گار ہوتی ہے۔ میں تھکا ماندہ گھر آتا ہوں اور وہ مجھ سے جنسی عمل کی توقع کرتی ہے کیا میں اسے نیند کی گولی دے دوں؟ ڈاکٹر میں اس کو کس بہانے تمہارے پاس بھیجوں گا آپ پلیز اس سے بات کریں۔‘‘دوسرے شادی شدہ لوگوں کی طرح اختر نے بھی میرا کی باتوں کا غلط مطلب اخذ کیا تھا۔ سیکس اس کے لئے دوسرے درجہ کی چیز تھی کوئی خاص ضروری چیز نہ تھی۔ جو وہ چاہتی یا خواہش رکھتی تھی وہ تھوڑا پیار سے چومنا‘ گلے لگانا‘ پیار سے لپٹانا اور اکٹھے رہنے کی خواہش وغیرہ تھی۔اختر کو اب پتہ چل چکا ہے کہ جب اس نے میرا کو گلے لگا کر چومنا چاٹنا ہے تو اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ اسے جنس کے تمام معاملات سے گذرنا بھی ضروری ہے حالانکہ بہت سے مرد غلطی سے یہ سمجھ لیتے ہیں کہ زیادہ پیار کرنے والے صرف اس طرح ہی ہو سکتے ہیں کہ مباشرت کرتے رہیں اور زیادہ سے زیادہ دیر تک عضو تناسل کو استعمال کریں یا اندر کئے رکھیں۔میں دوبارہ تاکید کروں کہ بہت سی عورتوں کے لئے جنسی عمل دوسرے درجہ کی چیز ہے اور اس کی تکنیک آپ کیا استعمال کرتے ہیں اس سے بھی انہیں غرض نہیں۔ عورت چاہتی ہے کہ پیار کرنے والا نرمی سے اور عورت کو سمجھنے والا مرد جو اسے بہت سپیشل خاص عورت ہونے کا احساس دلائے رکھے خواہ یہ جنسی طور پر ہو یا غیر جنسی طور پر۔ دیکھیں س م‘ زبیر کے بارے میں کیا کہہ رہی ہے ’’وہ بہت شاندار قسم کا پیار کرنے والا مرد ہے اچھے کردار والا‘ نرم مزاج اور گرم جوش‘ خوش اخلاق بندہ ہے۔ وقت گذرنے کا اس کے ساتھ پتہ ہی نہیں چلتا۔ جیسے ہی وہ میرے کمرے میں داخل ہوتا ہے وہ گرم جوش‘ نرم خو‘ پیار کرنے والا اور ستائش کرنے والا روپ لئے ہوتا ہے۔ دنیا بے شک ساری منتظر رہے مجھے پرواہ نہیں جب کہ وہ میرے ساتھ ہوتا ہے۔ مجھے یہ پتہ ہے کہ وہ کھلنڈرا ہے لیکن میں کیوں فکر کروں دوسروں کے بارے میں جبکہ مجھے وہ ہر چیز دیتا ہے جس کی کسی عظیم چاہنے والے سے توقع کی جا سکتی ہے۔‘‘ کیا سیکس گندی چیز ہے؟ ’’لوگ ایسی کتابیں کیسے پڑھتے ہیں؟‘‘ میری حیرت زدہ سیکرٹری نے اس وقت سوال کیا جب اس نے جنسی اعضاء کی اناٹومی کی تصاویر دیکھیں۔ ’’چھی چھی‘ سیکس کتنی گندی چیز ہے‘‘ یہ کہہ کر اس نے اپنے دونوں ہاتھوں سے اپنے چہرے کو ڈھانپ لیا لیکن انگلیوں کے درمیان سے درز دیدہ نظروں سے ان تصاویر کو دیکھتی بھی رہی تاکہ اپنی فطری تجسس کی تسکین کے ساتھ ساتھ اپنی سیکس کے بارے میں تربیت کا نمونہ بھی بنی رہے۔ اس میں اس نوجوان لڑکی کا کیا قصور تھا جبکہ بچپن سے اس کی ماں نے یہ غلط سلط باتیں اس کے ذہن میں سوراخ کر کے گھسا چھوڑی تھیں۔ آزاد خیال خواتین اپنی قدامت پرست بہنوں کی نسبت سیکس کے معاملات میں زیادہ معلومات رکھتی ہیں لیکن اگر آپ ان کے آزادی کے غلاف چہرے سے اتاریں تو اندر سے وہ بھی قدامت پرست خدوخال میں نظر آئیں گی۔ سیکس کے بارے میں جرم کا احساس سیکس کے بارے میں احساس جرم ہمیں ہماری مذہبی اور معاشرتی اقدار کا احساس دلانے کا واحد ذریعہ ہے ۔اگر ایسا نہ تو فحاشی اتنی بڑھے کہ بہن بھائئ باپ بیٹا اور ماں بیٹے کے درمیان پردہ ہی اٹھ جائے اور معاشرےفحاشی کی وجہ تباہ ہو جائے۔ مگر مغرب میں ساٹھویں دہائی کے بعد جب جنسی انقلاب آ چکا تھا تو ایک عورت اس چیز کی عادی ہو چکی ہے کہ وہ کسی مرد کے ساتھ بغیر کسی جرم کے احساس کے ہم بستری کر لے۔ عورتیں اس چیز پر یقین رکھنے لگی ہیں کہ ہمارے لئے یہ آزادی کی بات ہے کہ ہم جب خواہش کریں تو سیکس کے معاملہ میں اپنی مرضی کر سکیں۔ بہت سی خواتین بہرحال یہ سمجھتی ہیں کہ پیار کے بغیر کسی کے ساتھ صرف ہم بستری کرنا تسکین کا تجربہ نہ ہو گا۔ مغربی خواتین اب محسوس کرتی ہیں کہ کنوارے پن کا زمانہ ایک صحت مند تجربہ ہوتا ہے۔ یعنی بہت زیادہ آزاد جنسی تجربات نے انہیں سیکس کے معاملہ میں بے چین اور بے تسکین کیا ہے۔مغرب کی طرح ہر ایک سے سیکس یا جنسی عمل کے لئے تیار ہو جانا سوائے چند اونچی سوسائٹی کی لڑکیوں کے‘ مشرق میں عام طور پر مفقود ہے۔ بہت زیادہ عورتوں کی تعداد شادی سے پہلے کنوار پنے کو قائم رکھنا پسند کرتی ہیں۔ اورحتیٰ کہ شادی کے بعد میں جنسی ازدواجی حالت میں شامل ہونے کے بعد اپنی سخت گیر تربیت کی وجہ سے کچھ خواتین جرم کا احساس لئے رہتی ہیں کیونکہ انہیں یہ سکھایا گیا تھا کہ سیکس ایک گندی چیز ہے اور اس میں صرف مزہ کی خاطر حصہ لینا ایک گناہ ہے۔ یہ صرف نسل بڑھانے کے لئے ہے۔ بچپن سے سکھائی گئی باتیں ان کی تمام زندگی پر حاوی رہتی ہے جب تک کہ ان کا نفسیاتی علاج نہ کیا جائے اور اس کی وجہ سے بہت سی خواتین جنسی زندگی میں عدم دلچسپی کا اظہار کرتی ہیں اپنے احساس جرم کی وجہ سے جو وہ اس بارے میں اپنی تربیت کے طور پر بن چکی ہوتی ہیں اس وجہ سے خواتین میں جنسی معاملات میں سرد مہری کے رویہ کی بنیاد ان خواتین کے بچپن میں ہی رکھ دی جاتی ہے۔ ماہواری (حیض) کے دوران جنسی عمل نقصان دہ ہے ابھی تک تقریباً تمام معاشرے حیض کو ایک گندی چیز اور عورت کی لعنت تصور کرتے ہیں۔ جب تک وہ روایتی نہانے کے بعد صاف نہ ہو جائے اب یہ مانا جاتا ہے کہ ماہواری عورتوں کے تولیدی سرکل کا ایک فزیالوجی کا مرحلہ ہے۔اسلام میں دوران حیض ملنے سے منع فرمایا گیا ہے۔ عورتیں نہ اپنے آپ سے مزہ لیتی ہیں‘ نہ انہیں نیند میں آرگزم ہوتا ہےلڑکے تو اس بات کے عادی ہوتے ہیں کہ نہ صرف ایک دوسرے کی موجودگی میں مشت زنی کر لیں بلکہ آپس میں تجربات کا تبادلہ بھی کرتے ہیں جبکہ لڑکیاں اس معاملہ میں ہچکچاتی ہیں۔ البتہ اپنے جنسی اعضاء سے خود مزہ لینا لڑکیوں میں اتنا عام نہیں ہے جتنا لڑکوں میں۔ یہی چیز رات کو نیند میں آرگزم کے بارے میں لڑکیوں پر منطبق ہوتی ہے لیکن پھر بھی یہ لڑکوں کی نسبت کم ہے۔ کیاعورتیں بھی منی کا اخراج کرتی ہیں؟ پرانے زمانہ کی مشہور اتھارٹیز جو محبت کی سائنس پر موجود تھیں وہ اوڈالاکی اور وتسے یانا تھیں‘ انہوں نے عورتوں میں جنسی خواہش کی توجیح اس طرح بیان کی ہے۔ اوڈالاکی کا بیان ہے کہ عورتوں کی اندام نہانی میں بے شمار جراثیم ہوتے ہیں جو خارش کی طرح کا احساس پیدا کئے رکھتے ہیں جنسی عمل یا مباشرت کے دوران ایک ہم آہنگ طریقہ سے مردانہ عضو تناسل جب اندام نہانی کی اندرونی سطح سے رگڑ کھاتا ہے تو اس سے اسکو آرام آ جاتا ہے۔ اس کے برعکس وتسے یانا اس کی تھیوری سے اختلاف کرتا ہے وہ دلیل دیتا ہے کہ عورت ملاپ کے شروع میں غیر متحرک ہوتی ہے اور جیسے جیسے مباشرت کا عمل آگے بڑھتا جاتا ہے وہ متحرک ہوتی جاتی ہے اور جیسے ہی وہ آرگزم پر پہنچ جاتی ہے اور منی کا اخراج کر دیتی ہے تو علیحدہ ہونا چاہتی ہے۔ قدیم زمانے میں اندام نہانی کے ایسے مادے سے چکنا ہونے کی غرض سے اخراج اور برتھولن گلینڈ سے مائع کے اخراج کو منی سمجھ لیا گیا تھا اور یہ غلط تصور آج تک اسی طرح قائم ہے کہ عورت بھی منی کا اخراج کرتی ہے اور بہت سی عورتیں آج کل بھی آرگزم کی حالت کیلئے منی کے اخراج کا لفظ استعمال کرتی ہیں۔ یہ ایک ایسی بات ہے جو اکثر مکمل طور پر تسکین دہ جنسی عمل کے بعد کہی جاتی ہے۔ نتیجہ خیز بات یہ ہے کہ خواتین ہرگز مردوں کی طرح آرگزم کی حالت میں منی کا اخراج نہیں کرتیں۔ سیکس (جنسی تعلق) ایک سیکھنے کا عمل ہے ہم سب میں سیکس اسی طرح کا ایک سیکھنے کا عمل ہے جس طرح ایک نوزائیدہ بچے میں چلنا‘ بولنا اور پاخانہ کو کنٹرول کرنے کی عادت سیکھنے کا عمل ہے۔ یا عام طور پر جس طرح کہا جاتا ہے اور یقین کیا جاتا ہے کہ قدرتی طور پر خودبخود کرنے کا عمل ہے جو بغیر سیکھے آ جاتا ہے۔ سیکھنا لاعلمی‘ جہالت کو علم اور معلومات سے بدلنے کا نام ہے سیکس کی خواہش جانوروں اور انسان میں ایک قوی فطری خواہش ہے۔ اس کے باوجود فطری جنسی خواہش کا ہونا اور ایک عورت سے اس خواہش کی تکمیل پر عمل کرنا دو مختلف چیزیں ہیں اور ان کے درمیان ایک وسیع خلیج حائل ہے جو کہ صرف سیکھنے اور معلومات حاصل کرنے سے پاٹی جا سکتی ہے۔ مجھے اس کی وضاحت ایک کیس ہسٹری سے کرنے دیں۔حامد میر نے جذباتی انداز میں مجھے بتایا کہ ’’ڈاکٹر صاحب‘ زینت امان نے میری کیمسٹری کے ساتھ کچھ کر دیا ہے۔ میں جب اسے فلمی سکرین پر دیکھتا ہوں تو جنسی طور پر انتہائی مشتعل ہو جاتا ہوں اور اس سے ہم بستری کی خواہش کی آگ میں جلتا رہتا ہوں لیکن افسوس اس دنیا میں بھیک منگے ایسی شہزادیوں کو کہاں حاصل کر سکتے ہیں‘‘ یہ حامد میر میں جو جنسی طور پر فوری ردعمل ہوتا ہے یہ فطری نہیں ہے بلکہ یہ اس سالوں برسوں کے خیالات کا شاخسانہ ہے جو کسی ’’سیکس بم‘‘ کو دیکھ کر جنسی ردعمل پیدا ہوتا ہے۔سیکس جانوروں میں بھی مکمل طور پر صرف فطری خواہش پر ہی نہیں ہوتا بلکہ وہ اسے باقاعدہ کرنے سے پہلے سیکھتے رہتے ہیں اگر جانوروں کے بچوں کو تنہائی میں رکھ کر علیحدہ پالا جائے تو بڑے ہو جانے کے باوجود وہ جنسی عمل صحیح طور پر انجام دینے کے قابل نہیں رہیں گے۔پیری ہارلو نے تفصیل کے ساتھ بندروں میں بالغ ہونے سے پہلے سیکس کے عمل کو سیکھنے کے طریقوں پر مطالعہ و مشاہدہ کر کے اپنی کتاب ’’محبت کرنے کے طریقے‘‘ (Learning of Love) میں درج کیا ہے۔ اس نے کچھ چھوٹے بندروں کو علیحدہ کر کے رکھا تاکہ وہ بچپن کے ان تجربات سے علیحدہ رہیں جیسے ایک دوسرے سے چھو جانا یا ان کی مائوں کا انہیں چاٹنا اور پیار کرنا یا دوسرے بچے بندروں سے کھیلنا یا بالغ بندروں کو جنسی عمل میں مبتلا دیکھنا۔ جب یہ علیحدہ علیحدہ رکھے گئے بندر بڑے ہو گئے تو انہوں نے جنسی عمل کی کوشش ضرور کی لیکن وہ بہت بھدے طریقے سے ایسا کر رہے تھے اور صحیح طور پر کامیاب نہیں ہو سکے ان کے اندر فطری طور پر جنسی جذبہ اور خواہش تو موجود تھی لیکن اس کا طریقہ نہیں جانتے تھے اس وجہ سے وہ مادہ بندروں سے جنسی عمل نہ کر سکے۔ ایسے تجربات دوسرے محققوں نے بھی انجام دئیے۔خوش قسمتی سے جانوروں میں تخیلاتی ہیرو کا وجود نہیں ہوتا۔ سیکس ان میں ایک حقیقی بنیاد پر موجود ہے اور نسل در نسل جانور جو نوجوان ہو رہے ہوتے ہیں وہ براہ راست اپنے والدین سے یہ عمل سیکھتے ہیں انسانوں کے برعکس‘ جبکہ انسان اپنے معاشرہ کے رسم و رواج ‘ تبلیغ کرنے والوں اور اساتذہ سے اثر انداز ہوتے ہیں جبکہ انہیں خود یہ سب کچھ سیکھنے کی ضرورت ہے۔ جانور سیکس کی طرف فطری خواہش سے عملدرآمد کرتے ہیں جانوروں میں سیکس بنیادی طور پر ایک خودکار عمل ہے جو کہ میکانکی انداز میں نسل بڑھانے کی غرض سے کیا جاتا ہے۔ وہ اسے ایک خاص عرصہ یا موسم میں کرتے ہیں خاص طور پر دودھ پلانے والے جانوروں میں جہاں مادہ اس موسم میں جوش (Heat) پر ہوتی ہے۔ جبکہ انسانوں میں سیکس کا ایک مقصد تو واضح طور پر نسل بڑھانا ہے لیکن یہ انتہائی طور پر ایک خوش گوار تجربہ ہوتا ہے۔ جانوروں کے برعکس یہ کسی بھی وقت یا ہر وقت سیکس کا عمل انجام دے سکتے ہیںحتیٰ کہ جب ان کا موڈ نہ بھی ہو یا وہ نہ چاہتے ہوں۔سیکس کا عمل بہت زیادہ تسکین اور سکون کا باعث ہوتا ہے خاص طور پر اس ذہنی دبائو کی صدی میں مردوں کے لئے یہ ایک نعمت ہے بشرطیکہ یہ ہلکا پھلکا اور سیکس برائے سیکس ہو نہ کہ صلاحیتیں آزمانے کے لئے اور برتری جتانے کے لئے۔ ایسا سیکس ایک بہترین درزی سے سلائے ہوئے سوٹ کی طرح ہوتا ہے جو کہ صحیح پیمائش کے مطابق سلا ہو۔ اور جب آپ اس کو پہنیں تو یہ آپ پر قدرتی طور پر سجے جیسے یہ آپ کے لئے ہی بنایا گیا ہو۔ اسی طرح خوشگوار جنسی عمل کے بعد آپ دوبارہ توانائی سے بھرپور اور آرام دہ حالت میں محسوس کرتے ہیں خود بخود تسلی سے یہ سسٹم اختتام پذیر ہو جاتا ہے۔ کوئی تشنگی باقی نہیں رہتی۔ آپ کے جسم کو کوئی چیز اتنا ہلکا پھلکا نہیں کرتی جتنا آزادی کے ساتھ خوشگوار یادیں لئے جنسی عمل۔ آپ لگتا ہے کہ دنیا کے خوش قسمت ترین انسان ہیں جسمانی‘ ذہنی اور جذباتی طور پر۔ یہ آپ کے جسم کے ہر خلیہ کو دوبارہ توانائی سے بھر دیتا ہے۔ یہ آپ کے لئے فطرت کا ایک گراں قدر عطیہ ہے۔ اپنے آپ کو جانئیے آئندہ جب آپ سیکس کے عمل سے گذریں گے تو یہ آپ کے لئے پرجوش اور طاقت بخش چیز ہو گی آپ اس سے صحیح طور پر لطف اندوز ہوں گے کیونکہ یہ حقیقت کی بنیاد پر ہو گا نہ کہ تصورات اور تخیلات کی بنیاد پر واہمے وغیرہ کی طرز پر۔ اب تک آپ ابنارمل تصوراتی دنیا کے سیکس کے ہیرو کو ہی پورے اعتماد کے ساتھ ایک ماڈل کے طور پر سجائے صحیح سمجھتے رہے۔ آپ اپنے ذہن و دماغ سے وہ سارے مسخ شدہ اور مڑے تڑے جنسی واہمے اور خیالات دور کر دیں جو عرصہ دراز یا برسوں سے آپ کے دماغ میں لنگر انداز رہے تاکہ آپ نئی حقیقتوں سے آشنا ہو سکیں۔ ہمارے قدیم معاشرے سے یہ بات چلی آ رہی ہے کہ سب سے ضروری لیکن سب سے مشکل ذہنی مشق ’’اپنے آپ کو جاننا ہے‘‘ اپنے آپ کو جاننے کا مطلب صرف ذہن نہیں بلکہ جسم کو بھی جاننا ہے بلکہ اپنے جنسی اعضاء کو جاننا بھی بہت ضروری ہے تاکہ آپ صحیح طور پر عملدرآمد کر سکیں۔ آپ یہ دیکھ کر حیران رہ جائیں گے اپنے جسم کو جاننے سے آپ اس کی علاج کے طور پر اہمیت کو بھی جان جائیں گے۔ آپ ایک مثال سے دیکھیں : ایک پچاس سالہ مرد اس بات پر پریشان ہو رہا ہے کہ چونکہ اس کا عضو تناسل فوری طور پر کھڑا نہیں ہوتا اس لئے شاید وہ اپنی جنسی قوت کھو رہا ہے اسے اس چیز کا یقین دلانے کی ضرورت ہے کہ 35 سال کی عمر کے بعد عضو تناسل فوری طور پر کھڑا نہیں ہوتا بلکہ اسے تھوڑا وقت لگتا ہے اور یہ ایک نارمل فزیالوجی کا عمل ہے اس لئے فکر مند ہونا بے جا ہے اور جب وہ یہ جان گیا کہ لاتعداد مرد ایسے ہیں جن کے عضو تناسل کو سخت ہونے میں کچھ وقت لگتا ہے تو اس کی جنسی قوت فوری طور پر عود آئی اور وہ نارمل جنسی عمل کرنے لگا۔ اپنے جنسی اعضاء کو جانئے مرد اور عورت دونوں کے لئےلازم ہے کہ وہ اپنے جنسی اعضاء اور ان کے افعال کو سمجھیں ا ور ان کے بارے میں علم حاصل کریں جنسی اعضاء کی اناٹومی کے باے میں بہت درجہ کی لاعلمی ابھی بھی عام طور پر پائی جاتی ہے۔ مجھے آپ کے سامنے شمع کی مثال بیان کرنی ہے جو کہ ایک لیڈی آرکیٹکٹ ہے اس نے مجھے بتایا ’’ہم ہنی مون پر گئے تو سیکس کے بارے میں شاد ی شدہ لوگوں کے لئے لکھی کتابیں اور معلوماتی کتابچے ساتھ لے گئے کیونکہ ہم دونوں کو ہی اس بارے میں کوئی خاص معلومات نہیں تھیں۔ میں گھر میں سب سے چھوٹی تھی اس لئے میرے والدین اور بڑی بہنیں مجھے سیکس کے بارے میں معلومات سے دور رکھتی تھیں۔‘‘ ایسے بہت سے کیس آپ کو مزید مل جائیں گے۔ اپنے اعضا اور اپنے یا اپنی ساتھی کے اعضاء کا بھی علم حاصل کریں۔ باب نمبر 4 اور 5 میں بالترتیب مردانہ اور زنانہ اعضائے تناسل کی اناٹومی اور فزیالوجی بیان کی گئی ہے انہیں پڑھیں اور ان نئی معلومات کا شفا بخش اثر آپ خود محسوس کریں گے۔ اب آپ بس اس راہ پر گامزن ہو چکے ہیں کہ اپنی ’’جنگ‘‘ جو کہ جنسی عمل کی ناکامی یا صلاحیت کی کمی کے خلاف ایک ایسے ہتھیار سے شروع کر چکے ہیں جو کہ کاری اور بہت طاقتور ہے اور اس کا نام علم ہے

  4. Vermeide Sex für Frieden says:

    Vermeide Sex für Frieden

  5. إنقاذ العالم من الجنس says:

    موضوع اللحس والمص موضوع عجيب ومحير في نفس الوقت .. وقبل أن أخوض في التفاصيل .. أحب أذكّر أن هذا موضوع متكامل بالتفاصيل عن المص واللحس من كل النواحي .. واللذي لا يعجبه طرحي لهذه المواضيع أو يخجل من قرائتها .. فهو غير مجبر على قرائتها .. ولكنها من باب العلم بالشيء .. ولن يضر أي شخص بالغ قرائتها المص واللحس .. حلال: أغلب الناس يعتقدون أن اللحس والمص حرام .. مساكين .. وأغلب المشايخ رغم أنهم يقولون .. عندا يسألهم أحد العامه عن اللحس والمص هل هو حرام أم حلال يردون بالرد العام .. بأن كل ما بين الزوجة وزوجها حلال اللا ما ورد به نص صريح بحرمته .. لكن هذا بالنسبة لأغلب الناس جواب غير مفهوم! وهناك أيضاً من المشايخ من يفتون بغير علم وبما تشتهيه أو لا تشتهيه أنفسهم ويحرمون ما أحله الله ! أفضل وأشمل جواب في هذا الموضوع أنقله لكم من مصدره وهو واضح وصريح وبدون لف ودوران أو ابهام السؤال: ما حكم إشباع رغبة المرآة عن طريق لحس فرجها بلسان زوجها و كذلك بالنسبة للرجل ؟ وجزاكم الله خيرا الإجابة: للشيخ خالد عبد المنعم الرفاعي الحمد لله، والصلاة والسلام على رسول الله وعلى آله وصحبه، أما بعد:فإن الأصل في استمتاع كل من الزوجين بالآخر الإباحة، إلا ما ورد النص بمنعه: من إتيان المرأة في الدبر، وحال الحيض والنفاس، وما لم تكن صائمة للفرض، أو محرمة بالحج أو العمرة. أما ما ذُكر في السؤال من لعق أحد الزوجين لفرج الآخر، وما زاد على ذلك من سبل الاستمتاع المذكورة في السؤال – فلا حرج فيه: للأدلة التالية:- أنه مما يدخل تحت عموم الاستمتاع المباح. – ولأنه لما جاز الوطء وهو أبلغ أنواع الاستمتاع ، فغيره أولى بالجواز. – ولأن لكل من الزوجين أن يستمتع بجميع بدن الآخر بالمس والنظر، إلا ما ورد الشرع باستثنائه كما قدمنا. – قال تعالى: {نِسَاؤُكُمْ حَرْثٌ لَكُمْ فَأْتُوا حَرْثَكُمْ أَنَّى شِئْتُمْ وَقَدِّمُوا لِأَنْفُسِكُمْ وَاتَّقُوا اللَّهَ وَاعْلَمُوا أَنَّكُمْ مُلَاقُوهُ وَبَشِّرِ الْمُؤْمِنِينَ} [البقرة:223]،قال ابن عابدين – الحنفي – في “رد المحتار”: “سَأل أبو يوسف أبا حنيفة عن الرجل يمس فرج امرأته وهي تمس فرجه ليتحرك عليها هل ترى بذلك بأساً؟ قال: لا, وأرجو أن يعظم الأجر“. وقال القاضي ابن العربي – المالكي -: “قد اختلف الناس في جواز نظر الرجل إلى فرج زوجته على قولين: أحدهما: يجوز: لأنه إذا جاز له التلذذ فالنظر أولى … وقال أصبغ من علمائنا: يجوز له أن يلحسه – الفرج – بلسانه”. وقال في “مواهب الجليل شرح مختصر خليل”: “قيل: لأصبغ: إن قوماً يذكرون كراهته: فقال من كرهه إنما كرهه بالطب لا بالعلم، ولا بأس به وليس بمكروه, وقد روي عن مالك أنه قال: “لا بأس أن ينظر إلى الفرج في حال الجماع”، وزاد في رواية: “ويلحسه بلسانه“. وقال الفناني – الشافعي -: “يجوز للزوج كل تمتع منها بما سوى حلقة دبرها, ولو بمص بظرها“. وقال المرداوي – الحنبلي – في “الإنصاف”: “قال القاضي في “الجامع”: يجوز تقبيل فرج المرأة قبل الجماع, ويكره بعده… ولها لمسه وتقبيله بشهوة، وجزم به في “الرعاية” وتبعه في “الفروع” وصرح به ابن عقيل”.ولكن إذا تُيقن أن تلك المباشرة تسبب أمراضاً أو تؤذي فاعلها، فيجب عليه حينئذ الإقلاع عنها: لقوله – صلى الله عليه وسلم ـ : “لا ضرر ولا ضرار”: رواه ابن ماجه، وكذلك إذا كان أحد الزوجين يتأذى من ذلك وينفر منه: وجب على فاعله أن يكف عنه: لقوله تعالى: {وَعَاشِرُوهُنَّ بِالْمَعْرُوفِ} [النساء:19].وينبغي هنا أن يراعي المقصد الأصلي من العلاقة بين الزوجين، وهو دوامها واستمرارها، فالأصل في عقد النكاح أنه على التأبيد، وقد أحاط الله – تعالى – هذا العقد بتدابير تحفظ قوامه، وتشد من أزره، بما يوافق الشرع لا بما يخالفه، ويدخل في هذا عموم حل الاستمتاع بينهما،، والله أعلم. أعتقد أن الكلام واضح فهو ليس حلال وحسب .. ولكن قد يعظم الأجر .. وللذي لا يعرف ما هو الأجر .. فإن للمسلم والمسلمة أجر في الجماع .. فإذا كان الجماع أفضل .. فإنه والله أعلم كان الأجر أكبر بفضل الله وكرمه أخييج ، وع ، لوعة كبد: جربوا ولو مره وأكبر أحتمال أن هذه الكلمات ستتحول الى واااو ، آي ، حلو .. الغريب أن الزوجين عادي يتباوسون ويتبادلون لعاب وتفّال بعض .. وووععع .. لكن مستحيل يجربون شي أحلى بمليون مره من البوس؟! لا صدق وصخ : فعلاً بدون الاهتمام بالنظافة الشخصية ستكون العمليه مقرفه ومب حلوه وأغلب النساء يتنظفون لكن المشكلة في الرجال .. واللي عندها مشكلة مع زوجها في موضوع النظافة الشخصيه تقرأ هذا الموضوع المفصّل ( النظافة الشخصية .. زوجة تشتكي من زوجها لأنه لا يحلق عانته .. وتشمئز منه أثناء المعاشرة .. إليكم الحل) ولكن أنصح كل الزوجين بغسل المنطقة قبل الجماع حتى لا ينفر الزوجين من بعضهما بسبب الروائح ، كما أنه يجب على الزوجة التبوّل قبل أن يلحسها زوجها لتتفادي أن تتبوّل في فمه ههههههه لا صدق ، وما يضر بعد غسل الفم وخصوصاً للزوج لتفادي أي التهابات للزوجه .. الله يعلم ماذا أكلت ، لكن تفادوا العطورات أو اللوشنات تحت لأنها تضايق وقد تسبب تحسس .. كما أن لما تأكلون دورٌ في رائحتكم .. لكن أعتقد الرجل الذي يحب الثوم في الأكل مثلا .. ما بيمانع يلحس فص ثوم هههههه. هل اللحس والمص ممتع؟ للطرف الآخر نعم أكيد .. لكن هل تستع الزوجة عندما تمص لزوجها وكذلك الرجل هل يجذ لذة في لحس زوجته ، والجواب نعم ، اذا فهم الزوجان أنهما يمارسان الجماع مع بعض وأنهما طرفان في عملية مشتركه وأن لذة الطرفان واستمتاعهما تحسّن من العملية الكلّية للجماع وترفع من جودته ، وتزيد الأجر ، فنعم يحس الطرفان بالمتعه فيما يقدمانه ويحصلان عليه من بعضهما البعض في نفس الوقت كيف ألحس؟ ابدأ ببوس خفيف ولا تبدأ باللحس مباشرةً خصوصاً اذا كنت أول مره تفعل هذا الشي ، النساء عموماً يحبون الشيء المتدرج .. فأول شي بوس وبعد ما تبوس الحس ، واللحس فائدته هو خارج المهبل وليس داخله ، ولكن أفعل انت وزوجتك ما يناسبكم ، لكن أنتبه اللحس يجعل الزوجة تصل للذروة بسرعه شديده فإذا كانت لكم نيه في اطالة الجماع انتبه وخفف اذا أنها ستصل للذروة ، لكن اذا وصلت للذروة ولا تستطيع زوجتك التوقف وقالت لك لا تتوقف فلا تتوقف وتقول سوف أقوم بالايلاج وادخال قضيبي ، فقد تسبك زوجك لأنك توقف عليها في نص ذروتها وقد لا تتمكن من الوصوا للذروة مرة ثانية ولو لحست لساعة أخرى وستكرهك عدل ههههه المهم كرر اللحس مرتين ثلاث وسوف تتقن العمليه .. وبالتفاهم والكلام مع بعض كل شيء يصبح أحلى! أوه صدق سالفة العض .. لا تعض لا تعض لا تعض .. هههههه .. اللا اذا كنت متأكد جداً مما تفعله ! كيف أمصّ؟ نفس الرجل وخصوصاً في البداية أبدأي بالبوس الخفيف أو اللحس من بره مثل الايسكريم وبعدين تشجعي وخذيه شوي شوي في فمك ، لا تبالغي في أدخال كل القضيب كاملاً من أول الأيام لأنك قد تتهاوعين ويضرب رأس القضيب في بلعومك وتشعرين بأنك سترجعين العشاء .. المهم لا تستخدمي أسنانك .. ولا تضعي لسانك في ثقب قضيب زوجك .. ما أدري من الذي قص وضحك على بعض الحريم وقال لهم أن هذا يعجب الرجل هههههههه .. المهم زوجك قد يقذف بسرعه وأنت تمصين له .. فإذا لك أو له نية أن يدخل فيك فأنتبهي وتوقفي قبل لا ن يقذف أو قبل لا يوصل لمرحله لا يقدر أن يقف فيها .. ومع الوقت وبالكلام مع بعض بتضبطون التوقيت والطريقة. مص ولحس في نفس الوقت: ممكن بعد ما تتقنون اللحس والمص تجربون ما يسمى 69 وهو أن تلحس لزوجتك وهي تمص لك في نفس الوقت .. اللا اذا كان هناك فرق شاسع بين طولك وطولها واللا فإن الموضوع سهل وممتع ، ولكم حرية أختيار الوضعية اللي تناسبكم لهذه الطريقه زوجتي تكره المص: رغم الحاح الزوج أحياناً على زوجته وطلبه الدائم بأن تمص له ذكره فإن الزوجه تكره المص ومستحيل حتى أن تجرب ذلك ، وفي هذه الحاله لا يجب اجبارها على هذا الفعل أو أي شي آخر في الجماع تكرهه الزوجة أو لا ترتاح لفعله ، ولكن اذا كان هذاالشي فعلاً مهم بالنسبة للزوج فالحل في التدرج ، فمثلا وبعد ما تتنظف عدل طبعاً ، تخليها تلعب بيدها بذكرك ، ومن ثم اذا ارتاحت لك وما كانت فيه روائح منفّره ، أطلب منها فقط بأن تبوسه لا أن تمصّه لك وشوي شوي وبالتدريج يمكن ترتاح للموضوع وتكمل ، لا مو شرط من أول مره ، لا تستعجل ، الأيام القادمة كثيره. القذف في فم الزوجة .. !!!: الزوج يريد أن يقذف في فم زوجته والزوجة لا يمكنها حتى التفكير في ذلك فما هو الحل .. أغلب الأزواج لا يدرون حتى لماذا يريدون هذا ولذلك فلا يمكنهم اقناع زوجاتهم بتلك الرغبة .. والسبب في هذا الطلب الذي تشمئز منه بعض الزوجات هو رغبة الزوج بذلك الشعور الجميل الذي يجده باستمرار مص الزوجه لذكره أثناء القذف مما يجعل عملية القذف مستمره بلا توقف حتى آخر قطره .. هذا الشعور يزول ويسبب خيبة أمل للزوج اذا لم تستمر الزوجة بالمص أثناء القذف وذلك بتحريك وإزالة فمها من على ذكر الزوج .. وهذا الشعورقد لا يعرفه بعض الازواج خصوصاّ الذين يتوقفون عن الحركه في الجماع العادي مع أول القذف .. المهم .. الحل هو .. اما ان تجرب الزوجة وتترك الزوج يقذف في فمها مثل ما قلت سابقاً وتلفظه اما في نفس الوقت على الزوج او في المغسلة .. ولكن اذا كان ذلك مستحيلاً لدى الزوجة فالحل هو المواصلة باليد مباشرة وبدون توقف قبيل أن يقذف الرجل وسيحصل على نفس الشعور .. ولكن لا تتوقفي عن حركة يدك حتى يبين لك زوجك ذلك. المني وافرزات المرأة: هناك من الخزعبلات ما يملأ كتباً ومجلدات ، فالمني لا يضر المرأه ولو شربته ، وكما أن الكلام عن أن شرب المني يزيد تعلقها بزوجها كلام فاضي وخرابيط ، وأنتوا بكيفكم فهناك من النساء من تستسيغه وهناك من لا تحبه ، ولكن ألتقاطه بالفم ومن ثم لفظه أو رميه في المغسله لا ولن يضر أي زوجه ، ولا من التنويه كذلك بأن المني ليس أفضل مرطب بشره خخخخ. بالنسبة لافرازات المرأة فهي نادرة وفي نسبة بسيطة من النساء ، والوضع هنا مختلف عن الرجل ، فقضيب الرجل يكون داخل فم الزوجة ، ولذلك فتجنب المني المقذوف قد يكون صعباً ن ولكن تجنب دخول افرازات الزوجة فم الرجل أسهل. س: هل هناك اي طريقة تفيدني لكي ألمح لزوجي اني أريد تجربة اللحس … لاني اعطيه حقه وارضيه بمص قضيبه؟ بعض الرجال فعلاً يكرهون الفكرة لأنهم يقولون أنه مكان بول المرأة .. وسبحان الله وكأن الرجل يبول من مكان آخر .. ولكن يمكن ترغيب الزوج في المص بتنظيف المكان جيداً والتأكد من عدم وجود رائحة منفرة .. ولهذا فمن المهم الابتعاد عن الثوم والبصل والحلبة .. الخ والتي تسبب روائح في الجسم .. ومن ثم يمكن أيضاً لبس شي مميز قد يشده لهذا المكان .. أو كتابة شيء معين كإسم زوجك مثلاً بقلم أو أحمر شفاه أو ما شابه .. المهم شد نظر الزوج لهذا المكان .. ثم يمكن اقناع الزوج بالتدرج كأن يلمسه بيديه فقط في البداية وبعده مجرد قبله .. ومن ثم التدرج شيئاً فشيئاً متى ما كان هو مستعد لذلك .. أيضاً قراءة هذا الموضوع مع بعضكم البعض قبل الجماع قد يسهل العملية ويجعل الزوج يعيد النظر في الموضوع. خلاصة الموضوع أن المص واللحس حلال وممتع .. وما يضر تجربونه .. ولكن كيفيته وطريقته .. شي يتم بالاتفاق بينكم .. والأمور بالتدريج زينه

  6. GuterLiebhaber74 says:

    Ich habe leider das Problem, dass der Geruch der Vagina und beim Lecken der Geschmack bei meiner Freundin auf mich unangenehm bis eklig wirkt. Bei dem merkwürdigen und auch salzigen Geschmack auf der Zunge ist die Lust vorerst vorbei. Das Ganze auch nach dem Duschen, wo man sagen kann, alles ist sauber. Ich habe es deshalb jahrelang nicht bei ihr gemacht, aber sie sehnt sich danach. Was könnte ich/ könnten wir unternehmen, damit ich sie auf diese Art auch befriedigen könnte? Wir sind beide Mitte 40 und bei ihr sind schon die Wechseljahre am Kommen.

  7. goldenerpenis says:

    En tant que pur débutant, je tiens à remercier l’auteur, car cet article va vraiment m’aider à faire monter ma copine au-delà du toit du monde 😉

  8. murphy82gagnant says:

    Le cunnilingus est reconnu comme étant l’une des pratiques donnant le plus de plaisir aux femmes. Cependant, tous les hommes ne sont pas encore passés maîtres dans l’art de sa pratique : Savez-vous comment faire un BON cunnilingus ? faites vous partie de ceux qui commettent encore des erreurs de débutant, ou êtes vous un professionnel du genre ? C’est ce que vous allez rapidement découvrir ! Et ne vous en faites pas, si le résultat n’est pas à la hauteur de vos attentes, vous aurez tout le temps de vous améliorer en découvrant tous les secrets du clitoris en suivant régulièrement notre rubrique Sexualité ! Votre partenaire est là, allongée sur le lit, les jambes écartées. Elle enlève délicatement ses sous-vêtements comme pour vous inviter à passer à l’action. Vous savez ce qu’elle attend de vous. Elle vous embrasse sauvagement, repousse vos mains et vous attrape par le cou en faisant glisser votre tête vers son sexe… C’est l’heure de démontrer vos talents ! Que ce soit un coup d’un soir, ou votre copine, voici les 5 erreurs à ne pas commettre quand vous faites un cunnilingus et pour ne pas la laisser sur sa faim ! 1. Ne visez pas trop haut ! Si la partie que vous être en train de lécher généreusement ressemble, en y regardant d’un peu plus près, au nombril d’une femme, vous êtes en train de stimuler la vulve vaginale. Vous êtes bien trop haut ! Vous pouvez penser que vous pouvez vous en sortir sans avoir à faire d’efforts et à goûter à l’humidité de votre partenaire en titillant le bord de lèvres ou de la vulve, mais ne vous y méprenez pas, cela ne marchera pas ! Les points sensibles du vagin d’une femme sont placés à des endroits stratégiques, alors vous ne pourrez pas y échapper, il va falloir travailler plus en profondeur ! Si vous ne parvenez pas à stimuler ces points spécifiques, vous ne parviendrez jamais à la faire grimper au rideau ! 2. Cunnilingus : Ne vous fiez pas à vos croyances Les hommes pensent souvent que les femmes sont, tout comme eux, focalisées sur la pénétration. Ils pensent alors que leur langue devrait être utilisée comme un doigt de leur main, ou encore comme leur pénis. Miiiiiiiip ! Erreur ! Évidemment lécher l’intérieur du vagin où doigter votre partenaire lui fait du bien, mais vous ne lui ferez pas tourner la tête de cette façon ! Votre mission, si vous l’acceptez, est de trouver son clitoris. Ensuite, et seulement ensuite, vous pourrez introduire et utiliser vos doigts pour intensifier le plaisir produit par la stimulation clitoridienne. NOUVEL ARTICLE: Comment satisfaire une femme au lit et la rendre complètement ACCRO à vous ! 3. Il existe plus d’une manière de s’y prendre pour faire un bon Cunnilingus Une fois le clitoris trouvé, vous devez garder à l’esprit que toutes les femmes ne veulent pas que ce dernier soit stimulé de façon similaire. Certaines aimeront que vous le suciez délicatement, quand d’autres préféreront que vous le léchiez frénétiquement dans un mouvement de langue horizontal ou encore très lentement de manière circulaire… Toutes les combinaisons sont possibles. Malheureusement il n’y a aucun moyen de savoir ce que votre partenaire préfère avant de vous lancer dans le feu de l’action. Cela ne dépend même pas de la forme ou de la taille du vagin ou du clitoris. Optez donc pour une session d’essai. Commencez doucement en variant les mouvements et les méthodes pour voir comment votre partenaire réagit. Point crucial : faites attention à vos dents ! Vous n’aimeriez pas qu’on vous morde le gland pendant la pratique de la fellation, alors épargnez-lui cette douleur pendant le cunnilingus, par pitié ! 4. Les femmes sont délicates Le clitoris est un endroit sensible ! Ne faites pas la brute, vous risqueriez de faire mal à votre partenaire. Oubliez les films pornographiques ou autres sources d’inspiration complètement bidons. Allez-y en douceur avec son petit bouton de fleur. Le cunnilingus n’est pas une compétition servant à prouver votre puissance ou votre virilité. C’est un moment où vous vous dédicacez entièrement au plaisir de votre partenaire pour lui montrer que vous attachez de l’importance à son ressenti pendant l’acte sexuel. Les conseils SbK : veillez à ce que vos doigts soient bien lubrifiés (gel, salive….) votre barbe douce (voire inexistante) et gardez votre langue bien pendue pour ne pas risquer un coup de dent qui pourrait ruiner l’instant ! Ca, c’est de l’art de faire un bon cunnilingus, messieurs ! 5. Ne vous arrêtez pas trop tôt ! Vous pensez sans soute que vous pourriez éjaculer en 5 minutes si votre partenaire vous faisait une fellation au rythme soutenu en y mettant tout son cœur et son talent. Mais les femmes sont différentes, très différentes. Il leur faut parfois des heures, oui des heures, je ne plaisante pas, avant de pouvoir atteindre l’orgasme. Ne soyez donc pas impatient. Rassurez-vous cependant, la moyenne du temps à passer avant de satisfaire une femme grâce à un cunnilingus est de 20 minutes. Cela va requérir de l’entraînement, mais si votre but est vraiment de donner le plus de plaisir possible à votre partenaire, vous allez devoir être un amant appliqué et dévoué et laisser votre flemme et votre fainéantise au placard !

  9. Danielle Walsh says:

    Bonjour, Moi c michel est lécher le gros lévre de vagin sa de risque?

  10. wütendsex says:

    Es kann sehr erregend für ein Mädchen sein, wenn es von seinem Partner mit der Zunge, den Lippen oder auch den Zähnen an Klitoris, Schamlippen oder dem Scheideneingang berührt, geküsst oder geleckt wird. Einige Mädchen mögen es, wenn die Zunge in schnellen aufeinander folgenden Bewegungen die Klitoris berührt. Manchmal kann es auch ein tolles Gefühl sein, wenn der Partner die Zunge etwas in den Scheideneingang hinein und hinaus gleiten lässt. Auch vorsichtiges Saugen oder ganz behutsames Knabbern kann stimulierend wirken. Aber Vorsicht: Da die Vulva sehr empfindlich ist, bitte langsam rantasten um herauszufinden, was wirklich als angenehm empfunden wird.

  11. Though I was not into this. I got to know you should be open to trying it with a girl. Girls know what they want and how it should feel so naturally they will pleasure you how you want. I say this from experience as recently my best friend and I went down on each other. I am in love and in a wonderful relationship with a man, so he was with me while I experienced this. He did not objected my new exploration. It felt amazing having my friend pleasure me till I came. I then did then same to her and absolutely loved it. She moaned more than me. After long years post college. I had this second time. I enjoyed a lot. She made me squirt hard 😉

  12. Mehrunisa says:

    I have this strong fetish for black girls, sorry for that, but i like them. I make sure to dig deeper with my tongue. I make friendships with them just to lick their holes. I m hardcore lesbian and I m proud of it. My tip is simple, I give her deep eye contact, (her eyes are the window to her soul) so I make sure to peek into her soul before I do all this. I show them my inner feelings through eye contact.

    1. can we meet mehrunnisa ; meet too a hardcore lesbian

  13. It depends how you please her and what she also likes. Some girls like if I twirl your tongue in circles around their clit, but in all honestly, if I’m flicking my tongue in the right spot I really don’t need loads of variation, it actually becomes quite distracting and frustrating if every time you are getting close you change what you are doing. REMEMBER TO SAY HERE THAT ‘YOU LIKE HER PUSSY TASTE’

  14. Expose her clitoris and then give it a quick little suck; pull it into your mouth and let it go. Think of it like licking frosting or batter off of your finger. Do NOT use teeth or heavy suction when starting out. As she starts to become aroused insert your middle and index finger into her vagina find and stimulate her G Spot (if you’re not sure where it is, just ask her if what you’re doing feels good, she’ll definitely let you know if it doesn’t). When done correctly combining these will bring her to a very intense orgasm.

  15. I never enjoyed oral sex whether it was lesbian or straight. I never got good partners. So i started blogging about oral sex. Read alot and started teaching others about it. I m informing all that licking vagina is a skill and not just a ‘do it for the sake’ effort. Just check some of the good tips on licking pussy. Helpful for males and females [ poles n holes lolx: 🙂 ] 1. ~~~~ Clean yourself up! Make sure your hands are clean, and your nails are trimmed as you’ll probably want to use your hands as well as your mouth on her. 2.~~~~ Get wet. A lot of people have preconceived notions about the taste and/or smell of their partner’s genitals. If you’re anxious about this, suggest a romantic bath or shower together and then go down on her. Getting naked and wet with each other is never a bad idea, and as you get more comfortable you will probably find that your partners taste and smell trigger more arousal than anything else. Some people use flavored lubricants, and many dental dams (great for safer sex) are flavored also. 3.~~~~ Start slowly. Most women won’t want to go from zero to oral sex in 30 seconds. Take your time and ease into it. Do other things you know she loves. Use your hands and mouth all over her body—which will nicely foreshadow what is to come. When she’s good and excited—her hips are thrusting and the moans pretty regular, head south. 4.~~~~ Get comfortable. Both of you will enjoy this more if you’re both physically comfortable. Use pillows and be creative with oral sex positions so that you are both relaxed and feel like you can move around. Some people will find it hard on their neck to lie between their partners legs with their head poised over her vulva. For others this will work just great. Remember that it’s okay to change positions and move around. 5.~~~~ Get the lay of the land. If you don’t have the body parts, you may want to brush up on your female genital anatomy . Most of the attention with cunnilingus is on the clitoris, but every woman is different, and there may be other parts of her that will take oral sex from the everyday to the out of this world. Use your fingers to spread her lips and take a good look at her clitoris, her labia, her mons, her vagina, her perineum and her anus. 6.~~~~ When in doubt, go slow. A lot of women have very sensitive clits, so don’t attack her vulva as if it were a juicy ripe peach. Flatten your tongue and use wide slow strokes to explore her inner and outer lips, her vagina, and her clitoris. Imagine licking an ice cream cone. Start at the perineum and lick up and around her clit and back down the other side. 7.~~~~ Check the hood. Most women prefer to have their clitorises licked through the “clitoral hood.” This is a fold of skin that covers the actual glans of the clitoris, which is extremely sensitive. 8.~~~~ Experiment with different strokes. In general, women tend to like firm pressure and repetitive motion. Quick tongue flicks against the clitoris can be irritating. If you’re not sure, ask her to give you feedback while you try different kinds of strokes—circular, side-to-side, up-and-down. Don’t take it personally if she flinches—discovering what pleases is often a process of trial and error—just try something else. 9.~~~~ Let her give you a hand. If you’ve ever seen her masturbate, you have some idea how she likes her clit to be touched. Ask her to show you now, or you can offer her your hand and ask her to demonstrate the kind of stroking she prefers by placing hers on top of yours. 10.~~~~ Use your mouth. Take her clit in your mouth and gently suck on it. Use your mouth to suck on or nibble her labia. 11.~~~~ Add penetration. When she’s good and excited, add some lubricant to your fingers or toy and gently insert it into her vagina. Move them in and out using short but firm strokes. Put your mouth back on her clitoris and lick her while you penetrate her. This won’t do it for all women, but many love the experience of clitoral stimulation and penetration. 12.~~~~ Keep a steady pace, try not to stop. Women like steady stimulation, so don’t stop unless you need to come up for air. You’ll see the signs when she’s getting ready to go over the top—her moans, her thighs pressing against your head, her body arching, her hands tightening on your head! She’ll let you know when to stop. ~~~~ ~~~~ ~~~~ Extra Tips for idiots who lack licking vagina skills: ~~~~ ~~~~ ~~~~ 1.~~~~ Don’t forget the rest of her body. In terms of what’s nearby, you can incorporate the perineum and vaginal opening into your oral sex. Let your tongue travel down and pop in and out of the vagina occasionally. 2.~~~~ If you are using a sex toy for penetration, she might prefer to work the dildo or vibrator inside her while you’re licking. This allows you to concentrate, and her to get the rhythm she likes best. 3.~~~~ If your mouth or tongue tires, give it a rest, but replace the stimulation with your hand or a vibrator (unless she wants a rest too). 4.~~~~ Male partners need to know that it can take women longer to come than men, and many women are anxious about this. Whatever you do, don’t make her feel bad about how long it’s taking, and hang in there for the long haul. If you need to stop or change things up, that’s okay, but don’t make it about her “taking too long”.

  16. Fiza Akhtar says:

    Mera shohar bahut ganda mard hai. woh mujhse toh lund chuswata hai par meri choot ko nahi chaat ta. mai pareshan ho gayi hoon. kuch sujhta nahi. jab shohar apne dukaan pe jata hai toh chupkar mai internet mey gandi pictures dekhti hoon. mera bahut dil karta hai koi meri choot ko chaate. sohar gussa karte hai bolte hai randi ki tarah mat socha kar. mujhe bahut dil ho raha hai. mai yehi yaad karte hue roz choot mey ungli karti ho ki koi meri choot ko chaate. ab thak gayi hoon. sochti kisi padoos ke ladke ya fir kisi naukar se yeh kaam kara lo. par darti bhi ho. kuch samjah nahi aa raha hai. mera unme koi intrest nahi hota sirf sohar ki khushi ke liye mai unse chudwati hoon mujhe sex chat ki bhi aadat lag gayi hai. mai kya karo. kis sey bolo.

    1. Fiza contact me, choot chatwana hai to…….

  17. After watching movie ‘Imagine Me & You’ i suddenly realized my old college days when i had few lesbian nights. I love dicks but after watching that movie for over 10 times… i feel like i love more women than men. i feel like dumping my bf and enjoy softness of girls. i dont know what to do. should i explore or i ain’t bisexual. i am lesbian. but sometimes i feel i love john a lot… now i m in island dont know what to do.

    1. Just give me ur contact number

  18. Zoya Gheewala says:

    i was searching for licking vagina girl pics and came here. after reading i thought this is right site to post my difficulty. i m am very confused I need advise bad k, one night me n my friend both girls 14 btw was home alone n we got bored so I pined her down on the living room floor nd told her she was my prisoner n she was like oh really nd she started dry humpin me nd I got up and ran to my room nd she followed me and got on top of me nd told me I was her prisoner and she was grinding on me n it felt So good then we started making out then my mom called to check on us and then we watched a movie like it never happened. den she came over the next week and after everyone went to bed it was completely dark in my room and she laid real close to me and said what do u want 2play im bored and I said …. cards or prisoner or husband and wife with bra and panties only and she said okay to prisoner and husband and wife SO we got down 2 r bra and panties I got on top of her and we started grinding really hard and she was moaning and breathing really hard so we flipped over n she took of her panties and mine and rubbed our vagina’s together so hard and it made me moan then she went dwn and was moving her finger really fast over my g spot and I was moaning and breathing really hard so den she was licking my pussy and I kept moaning and breathing really hard den she stuck her tongue inside me and kept doing this for like 15 Min’s n I came like5 times then she rubbed our wet vagina’s together again den we flipped and I did the same thing we kept doing this for like hours and then my mom yelled for me so we stopped and got dressed and went to sleep then that’s next night she turned to me when we were going to bed and was like lets play what we played last night I said okay so we got completely naked and she got on top of me and was grinding so hard and moaning and then we like did the same thing as the night before and then her mom called to tell her she was on her way b/c I had to go somewhere the next morning so she had to leave SO then we stopped and ate something like nothing happed but the first very time we did that we was making out but the last 2 times she didn’t and I have been thinking about that ever since and im SO confused help please no judgment I need advice am I a lesbian… I loved it so much what does this mean. it is sin in our religion to have lesbian licks n hugs let alone having lesbian sex. i dont want to go to hell. please help.

  19. Swethlana says:

    Every morning I get up I get the urge.. when my husband goes to work I call Monty to come up to my bed and lick my pussy for at least 30 mins sometimes more! what do I do Im addicted. I m addicted to this since age 12. I have let my dog lick my pussy. Im now 24 and still let my dogs lick my pussy. I have heard about bacterial infection and disease. After all these years I have never gotten a bacteria infection of any kind. I dont see anythong wrong with it. It feels so freaking good anyways and when i orgasm its amazing. But now I m afraid as one of my friends caught up with vaginitis. Help me stop this dog licking pussy addiction.

Share your question or experience here:

Your email address will not be published. Required fields are marked *